میرے خوابوں کی بستی

تلاش ہے مجھے اک ایسی بستی کی 
جہاں حکمرانی اب بھی قائم ہو 
محبت، امن، مساوات اور انسانیت کی 
جہاں کے مکان چاہے کچے ہوں 
لیکن لوگ سچے ہوں 
جہاں اب بھی اک دوسرے کے دکھ سکھ میں 
سب لوگ ایک ساتھ روتے، ہنستے ہوں 
جہاں بنک بیلنس ، بنگلہ گاڑی 
ذات برادری کی نہیں 
انسان کی عزت ہوتی ہو 
یہاں نگاہوں میں ہوس نہ ہو 
دوسروں کی ماں، بہن کو بھی 
احترام کی نگاہ سے دیکھا جاتا ہو 
اور وہ بستی ایسی بستی ہو 
جس میں انشاء کے گاوں کی جھلک بھی دکھتی ہو 
جہاں اشفاق احمد سے بابے بھی رہتے ہوں 
جو دوسروں کی زندگیوں میں آسانیاں  بانٹتے ہوں 
از " محمد یاسرعلی "

<<< پچھلا صفحہ اگلا صفحہ >>>

اگر آپ کے کمپوٹر میں اردو کی بورڈ انسٹال نہیں ہے تو اردو میں تبصرہ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کرکے شائع کردیں۔


اپنی قیمتی رائے سے آگاہ کریں

اہم اطلاع :- غیر متعلق,غیر اخلاقی اور ذاتیات پر مبنی تبصرہ سے پرہیز کیجئے, مصنف ایسا تبصرہ حذف کرنے کا حق رکھتا ہے نیز مصنف کا مبصر کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں۔

میرا خواب، پیار، امن، مساوات اور انسانیت کا ترجمان نفرت، دہشتگردی، طبقاتی تفریق اور فرقہ پرستی سے پاک پاکستان " محمد یاسرعلی "

www.yasirnama.blogspot.com. Powered by Blogger.